اعلی درجے کی تلاش
کا
2393
ظاہر کرنے کی تاریخ: 2012/03/08
 
سائٹ کے کوڈ fa14219 کوڈ پرائیویسی سٹیٹمنٹ 22614
سوال کا خلاصہ
بلا سند مکانوں کو خریدنے اور بلدیہ کی اجازت کے بغیر مکان بنانے کا حکم کیا ہے؟
سوال
بلا سند مکانوں کو خریدنے اور بلدیہ کی اجازت کے بغیر مکان بنانے کا حکم کیا ہے؟
ایک مختصر

دفتر حضرت آیت اللہ العظمیٰ خامنہ ای{مدظلہ العالی}:

بہر صورت اسلامی نظام کے قوانین اور مقررات کی رعایت کرنا واجب ہے اور قوانین کی خلاف ورزی جائز نہیں ہے۔

دفتر حضرت آیت اللہ العظمیٰ مکارم شیرازی{مدظلہ العالی}:

اگر مربوط قوانین کے خلاف ہو تو جائز نہیں ہے۔

دفتر حضرت آیت اللہ العظمیٰ صافی گلپائیگانی{مدظلہ العالی}:

اگر اس کے حقیقی اور شرعی مالک کا ہو تو جائز ہے۔

حضرت آیت اللہ مھدی ہادوی تہرانی{دامت برکاتہ} کا جواب حسب ذیل ہے:

۱۔ بلا سند مکانوں کی خریدو فروخت ، اگر قانونی ممانعت نہ ہو تو جائز ہے۔

۲۔ اگر بلدیہ کی اجازت کے بغیر تعمیرات کے لیے بلدیہ کی طرف سے عملاً ممانعت ہو تو، اشکال سے خالی نہیں ہے۔

دیگر زبانوں میں (ق) ترجمہ
تبصرے
براہ مہربانی قیمت درج کریں
مثال کے طور پر : Yourname@YourDomane.ext
براہ مہربانی قیمت درج کریں

زمرہ جات

بے ترتیب سوالات

ڈاؤن لوڈ، اتارنا